Khui Ratta

کوٹلی کھوئیرٹہ روڈ کی تعمیر شروع کرنے کا اعلان پاسبان کھوئیرٹہ کا دھرنا رنگ لے آیا

کوٹلی ( ) کوٹلی کھوئیرٹہ روڈ کی بد حالی کی بنیاد پر پاسبان حقوق کھوئیرٹہ کی طرف سے پہیہ جام ہڑتال اور دھرنا رنگ لے آیا۔ عوامی احتجاج کانوٹس لیتے ہوئے چیف انجینئر شاہرات کوٹلی پہنچ گئے پاسبانِ حقوق کے ذمہ داران کے ساتھ ون ٹو ون مذاکرات کے بعد اس اہم عوامی نوعیت کے مسئلہ کو حل کرنے کے لیے احکامات جاری کر دےئے۔ کھوئیرٹہ کوٹلی سڑک کی مرحلہ وار دو حصوں میں تعمیر کاکام تین ماہ کے اندر اندر شروع کرنے کا اعلان۔ چیف انجینئر نے عارضی طور پر سڑک کو عوام کے لیے قابلِ استعمال بنانے کے لیے ایک ہفتے کے اندر اندر پیچ ورک کا حکم دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق چیف انجینئر سردار اسحاق خان اورپاسبانِ حقوق کمیٹی کے درمیان گزشتہ روز پی ڈبلیو ڈی ریسٹ ہاؤس میں مذاکرات ہورہے تھے کہ کمیٹی کے متحرک عہدیداران شیربان اکبراور راجہ عقیل محکمہ شاہرات کے افسران پر برس پڑے ۔ اقرباء پروری ، کرپشن ، لوٹ مار اور بدانتظامی کے الزامات لے کر افسران کو آڑے ہاتھوں لیا۔مذاکراتی ماحول خاصا تلخ ہوا ، بات ہاتھا پائی تک جاپہنچی اور تصادم ہوتے ہوتے رہ گیا۔ ایس ڈی او ذیشان چوہدری کے ایک جملے پر مذاکراتی ٹیم کے ارکان مشتعل ہو کر ذیشان پر چڑھ دوڑے اس موقعہ پر ناظم شاہرات طفیل گورسی، ایکسئن اعجاز گورسی، اے ڈی سی کاشف چوہدری، صدر پریس کلب شاہنواز بٹ اور سینئر صحافی شوکت قمر نے اپناکردار اداکرتے ہوئے فریقین کے درمیان بچ بچاؤ کروا دیا۔ موقع پرموجود چیف انجینئر صورتحال دیکھ کر سٹپٹاکر رہ گئے۔ تاہم ایکسئین اعجاز گورسی نے ایس ڈی او ذیشان کے رویے پر شرکاء سے معافی مانگ کر حالات کو قابوکرلیا۔ چیف انجینئر نے کہاکہ کھوئیرٹہ کوٹلی روڈ کی تعمیر حکومتی ترجیحات میں شامل ہے ، عوام کی مشکلات کا ہمیں بھرپور احساس ہے۔ سیاسی معاملات اور فنڈز کی کمی کے باعث ضلع کی 1275کلومیٹر سڑکات کو ٹریفک کے لیے ہمہ وقت بحال رکھنامشکل ہورہاہے پھر بھی کوٹلی کھوئیرٹہ روڈ کو اے ڈی پی میں شامل کرلیاگیاہے۔ روڈ کا PCون بن چکاہے تقریباً 75کروڑ کی خطیرلاگت کے ساتھ بین الاقوامی معیار کے مطابق دومرحلوں میں روڈتعمیرکی جائے گی ۔ روڈ کے دونوں حصوں 11کلومیٹر اور 12کلومیٹر کی علےٰحدہ علےٰحدہ سکیمیں مرتب کی جاچکی ہیں ۔آمدہ بجٹ میں حکومتی منظوری اور فنڈز واگزاری کے فوری بعد سڑک کاکام شروع کر دیاجائے گا۔ انہوں نے کہاکہ عوام کی تمام شکایات جائز ہیں ۔ 1275کلومیٹر سڑکوں کی دیکھ بھال کے لیے سالانہ ساڑھے تین کروڑ روپے ترقیاتی فنڈ ناکافی ہے جس کی وجہ سے مسائل پیداہورہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مذکورہ روڈ کے ٹینڈرکے حوالہ سے پھیلائی گئی خبریں گمراہ کن اور جھوٹ کا پلندا ہیں۔ کسی بھی سرکاری افسر کی طرف سے اس طرح کے بیانات جہاں عوام کے لیے پریشانی کا باعث وہاں حکومت کی بدنامی کا موجب بھی بنتے ہیں۔ افسران کی ذمہ داری ہے کہ وہ عوام کو اصل حقائق سے آگاہ رکھیں۔ ہم نے بین الاضلاعی شاہرات کی تعمیر و مرمتی کو ہدف بنارکھاہے جلد عوام کو ریلیف پہنچانے کے لیے عملی اقدامات شروع کر دیں گے۔ ناظم شاہرات طفیل گورسی اور ایکسئن اعجاز گورسی نے سڑکوں کی تعمیر ، اپ گریڈیشن اورمرمتی کے حوالہ سے شرکاء مذاکرات کو تفصیلاً بریفنگ بھی دی۔ آخر میں ایکسئین اعجاز گورسی کی طرف سے شرکاء مذاکرات کو ڈنر بھی دیا گیا۔ مذاکرات میں کوآرڈینیٹر پاسبان حقوق و صدر ڈسٹرکٹ بار کوٹلی راجہ خورشید ایڈووکیٹ ، چےئرمین چوہدری مالک، مرزا غلام جرال، اظہرملک ،کاشف شبیر، نثار اعظم راجہ، راجہ اسد اللہ خان و دیگر اراکین نے شرکت کی۔

Share this:

Related News

Comments are closed

Jobs: career@azadnews.co.uk
News: news@azadnews.co.uk
Enquiries: info@azadnews.co.uk
Tel: +44 7914314670 | 07588333181

Copyright 2015 © AZAD is a part of Indigo Marketing & Media Productions Ltd.
41 West Riding Business Center, BD1 4HR |08657270| England & Wales.